خواب میں سورة سباء کی تلاوت کی تعبیر

جس نے خواب میں سورۃ سباء کا کچھ حصہ پڑھا یا اس پر پڑھا گیا۔ تو وہ دنیا میں زہد اختیار کرے گا اور پہاڑوں اور وادیوں میں ٹھکا نہ پکڑے گا۔ او کہا گیا ہے کہ بعض دفعہ اس سے کوئی نعمت زائل ہو گی اور پھر اگر اللہ نے چاہا تو مل جائیگی۔ اور کہا گیا ہے کہ وہ بہادر ہوگا اور ہتھیار اٹھانے کو پسند کرے گا۔

سورة سباء قرآن کی چونتیسویں سورت ہے جس میں چون آیات ہیں۔ اس میں سلیمان علیہ السلام اور داؤد علیہ السلام کی زندگیوں پر بحث کی گئی ہے۔ سباء کے لوگوں کے بارے میں ایک کہانی، کافروں کے خلاف چیلنجز اور تنبیہات کے ساتھ ساتھ قیامت سے متعلق وعدوں کا بھی ذکر ہے۔

عقیدہ وحی کے وقت اور سیاق و سباق کے پس منظر کے حوالے سے، یہ ایک "مکّی سورت” ہے۔ جس کا مطلب ہے کہ یہ مدینہ میں بعد کے بجائے مکہ میں نازل ہوئی ہے۔